Pakistan Hockey Federation Press Conference

Pakistan Hockey Federation (PHF) on Thursday named Danish Kaleem as national junior team’s head coach.While addressing a press conference here Thursday PHF Secretary Asif Bajwa also announced the junior team management. He was accompanied by Chairman Selection Committee Manzoor Hussain Junior.

While Danish will be head coach of jr team former captain Mohammad Imran, Mudassar Ali Khan and Rana Zaheer Babar are other members of the management Bajwa added PHF has planned to hold the camp training of the national junior team at Lahore’s National Hockey Stadium.

“We held a junior championship, giving talented players at junior level a chance to showcase their skills and advance to higher level. Players participating in the National Junior Hockey Championship will be given a chance at the international level. Junior players were not given proper opportunities in the past,” he maintained.

On the FIH ranking system, Bajwa said: “It is tempting to get points based on the performances of matches. Pakistan hockey will play more than 40 matches this year to improve the ranking points. I promise that this year hockey team ranking will improve.”

He said that PHF is expanding its events of activities at domestic level. ‘We plan to hold junior and senior hockey tournaments, and Pakistan Hockey League will also be in place this year,” he stressed.

Meanwhile PHF also released a list of 55 players selected for the training camp during the national junior championship for a training camp.The two week training camp of the junior probable will start from January 12 at National Hockey Stadium.

Camp trainees are:

Goalkeepers: Waqar Younas, Abdullah Ishtiaq, Abdul Rehman, Ali Raza, Ahmed, Sheikh Abdullah, Awais Rashid.

Full- backs: M Yasir, Waqas Butt, Zohaib Sarwar, Sulman Butt, Arbaz, Bilal Raza, Sami Ullah Khan, Sufyian, Rehan Butt, Haris Naseer, Usman Bashir, M Usman.

Half-backs: Danish Shah, Mehran Ahmad, Mehran Rasool, M Usama, Aqeel Ahmed, Abdul Basit, Moin Shakeel, Rizwan Ali, Ghazanfar Ali, Ataullah, Asif Hanif, Omar Bilal, Muhib Ullah.

Forwards: Roman Khan, Rana Waheed, Hammad Anjum, A Wahab, Ali Hamza, Hanan Shahid, Amir Sohail, Basharat Ali, Arshad Liaqat, Afraz, Waqar Ali, Shuhaib Khan, Mohsin, Shahbaz, Rana Waleed, Ihsan Elahi, Zain Ejaz, Ali Aziz, Hassan Saleem, Hammad Ayaz, Arbaz Ayaz, Adeel Lateef, Bilawal, Murtaza Yaqoob, Fahad.

 

سیکٹری جنرل پاکستان ہاکی فیڈریشن محمد آصف باجوہ نے چیئرمین سلیکشن کمیٹی منطور حسین جونیئر کے ساتھ پی ایچ ایف ہیڈ آفیس لاہورمیں پریس کانفرنس کرتے ہوے جونیر ٹیم مینجمنٹ اور ٹیرنگ کیمپ کا اعلان کیا۔
پاکستان ہاکی فیڈریشن کے سیکرٹری آصف باجوہ کی پریس کانفرنس کرتے ہوے کہا کہ پوری قوم کو نئے سال کی مبارکباد، نیا سال ہاکی کے لیے بہترین سال ثابت ہوگا۔ نئے سال کا آغاز نئے سرے سے کرنے جا رہے ہیں۔ اس سال ہاکی ٹیم کامیابیوں کی طرف بڑھے گی اورکھویا ہوا مقام حاصل کریں گے۔ جب یہ سال 2020 ختم ہوگا تو ہاکی پر بہترمقام پر ہوگی۔

ہم نے جونیئر چینپئن شپ کروائی جس سے جونیئر لیول پر ٹیلنٹ کو آگے بڑھنے کا موقع فراہم کیا گیا۔ پاکستان نیشنل جونیئرہاکی چیمپئن شپ میں حصہ لینے والے کھلاڑیوں کو انٹرنیشنل لیول پر موقع دیا جائے گا۔ جونیئر کھلاڑیوں کو مناسب مواقع نہیں فراہم کیے گئے۔

چارجون کو پاکستان جونیئر ہاکی ٹیم ڈھاکہ میں جونیئر ہاکی ایشیا کپ کھیلے گی۔ جونیئر ایشیا کپ ، جونیئر ورلڈکپ کے لیے کوالیفائی راؤنڈ بھی ہوگا۔ ایشیا کپ میں سے چار ٹیمیں جونیئر ورلڈکپ کے لیے کوالیفائی کریں گی۔
سلیکشن کمیٹی کا کام قابل تعریف ہے اور جو ٹیلنٹ نکالا ہے پاکستان ہاکی کی مظبوط بنیاد رکھے گا۔ بارہ جنوری سے تربیتی کیمپ لگایا جائے گا۔ ان لڑکوں میں سے ہم شارٹ لسٹ کریں گےاور لڑکوں کو انٹرنیشنل لیول پر مقابلوں کے لیے تیار کریں گے۔

پاکستان ہاکی فیڈریشن کے سیکرٹری آصف باجوہ نے صدر پی ایچ ایف بریگیڈیئر ر خالد سجاد کھوکھرکی مشاورت سے جونیر ٹیم مینجمنٹ کا اعلان کیا۔ دانش کلیم ہیڈ کوچ، ساتھ سابق کپتان ہاکی ٹیم محمد عمران، مدثر علی خان اور رانا ظہیر بابر ہوں گے۔ ٹیم میں ہمیشہ فٹنس کی کمی رہی ہے اوراسی لیے عابد حمید کو ہم نے فٹنس کی زمہ داری دی ہے۔ تمام مینجمنٹ کو یہ ذمہ داری دی گئی ہے کہ لڑکوں کو مکمل طور پر تیار کریں۔ جو کوچزز تعینات کیے گئے ہیں ان کی کارکردگی ہاکی میں بہت بہتر رہی ہے۔ دانش کلیم، محمد عمران اور مدثر، رانا ظہیر بابر اپنے اپنے ڈیپارٹمنٹ کی ٹیموں کی کوچنگ کررہے ہیں اوران کوچززنے کھلاڑیوں کے ساتھ خاصہ کام کیا ہے۔

پاکستان ہاکی کا سفر بہتری کی طرف جاری ہے جو بہتر سے بہتر ہوجائے گی۔ ازلان شاہ ہاکی ٹورنامنٹ میں شرکت کرنا اس بات کا ثبوت ہے۔ جلد ہی ازلان شاہ ہاکی ٹورنامنٹ کے لیے کیمپ بھی لگے گا۔

رینکنگ سسٹم بدل گیا ہے اب میچزز کی پرفارمنس کی بنیاد پر پوائنٹس ملینگےکوشش ہے پاکستان ہاکی رواں سال چالیس سے زائد میچزز کھیلےگی تاکہ رینکنگ پوائنٹس بہتر کیے جا سکیں۔ وعدہ کرتا ہوں کہ اس سال ہاکی ٹیم سترہ نمبر پر نہیں بلکہ اوپر آئے گی۔ پاکستان ہاکی فیڈریشن اپنی سرگرمیاں بڑھا رہی یے۔ ڈومیسٹک لیول پر جونیئر اور سینئرز ہاکی ٹورنامنٹس کرانے کا پلان کیا گیا ہے۔ پاکستان ہاکی لیگ بھی اس سال ہر صورت ہوگی۔ پاکستان ہاکی فیڈریشن بہت جلد مکمل پلان اور شیڈول سے آگاہ کرے گی۔ ہم نے ہاکی ایونٹس کروائے اور آنے والے دنوں میں ویمن کے بھی ہاکی ایونٹس کروانے جارہےہیں۔ پاکستان ہاکی فیڈریشن کے پاس وسائل نہیں ہیں۔ پاکستان ہاکی فیڈریشن نیک نیتی سے کام کررہی ہے۔ ہمیں اس وقت میڈیا، حکومت اورعوام کے تعاون کی ضرورت ہے۔

چیئرمین ہاکی سلیکشن کمیٹی منظور جونیئرنے کہا کہ جون میں ہم ہاکی کے ساتھ منسلک ہوئے، چھ ماہ کے اندر ہم نے ہاکی کی بہتری میں اہم کردارادا کیا ہے۔ ہم نیک نیتی کے ساتھ آگے بڑھ رہے ہیں۔ ماضی میں جو غلطیاں ہوئیں ہیں انہیں دہرانا نہیں چاہتے۔ پاکستان ہاکی ٹیم کی بلندی کا وقت شروع ہوچکا ہے
جونیئر ٹیم کے زریعے پاکستان کو نیا ٹیلنٹ دیں گے۔ جونیئر ٹیم کے لڑکے پاکستان ہاکی ٹیم کا مستقبل ہیں۔ کوچزز کے ساتھ خود بھی تعاون کریں گے۔ کیمپ میں کھلاڑیوں پر بریک بینی سے کام کریں گے۔ کیمپ میں جو لڑکے آئیں گے ان کے ساتھ مل کر ان کی تربیت کریں گے
اس وقت جن لڑکوں کا انتخاب کیا ہے ان کا معیار پہلے سے بہتر ہے۔ ہماری فیڈریشن ممبران سے میٹنگز چل رہی ہیں جو ہم صرف کام کرنے کے لیے کرتے ہیں۔ صدر پی ایچ ایف کا شکریہ ادا کرتا ہوں جنہوں نے ہماری باتیں مانیں۔ جب سے میں نے اور آصف باجوہ نے فیڈریشن کو جوائن کیا اس سے پہلے کے حالات کا موازنہ کرلیں
ہم نے بہت بہتر کام کیا ہے جو جونیئر ٹیم ہم نے منتخب کی ہے کچھ کچھ سال تک آپ کو رزلٹ نظر آجائے گا جلد ہی تبدیلی لے کر آئیں گے اور آپ سب دیکھیں گے۔

گول کیپرز: وقار یونس ، عبداللہ اشتعیاق ، عبد الرحمن ، علی رضا ، احمد ، شیخ عبد اللہ ، اویس راشید۔

فل بیک: محمد یاسر ، وقاص بٹ ، زوہیب سرور ، سلیمان بٹ ، ارباز ، بلال رضا ، سمیع اللہ خان ، صوفیان ، ریحان بٹ ، حارث نصیر ، عثمان بشیر ، محمد عثمان۔

ہالف بیک : دانش شاہ ، مہران احمد ، مہران رسول ، محمد اسامہ ، عقیل احمد ، عبدالباسط ، معین شکیل ، رضوان علی ، غضنفر علی ، عطاء اللہ ، آصف حنیف ، عمر بلال ، محب اللہ۔

فارورڈز: رومان خان ، رانا وحید ، حماد انجم ، عبدالوہاب ، علی حمزہ ، حنان شاہد ، عامر سہیل ، بشارت علی ، ارشد لیاقت ، افراز ، وقار علی ، شعیب خان ، محسن ، شہباز ، رانا ولید ، احسان الٰہی ، زین اعجاز ، علی عزیز ، حسن سلیم ، حماد ایاز ، ارباز ایاز ، عدیل لطیف ، بلاول ، مرتضیٰ یعقوب ، فہد۔